Home / انٹر نیشنل / کرونا وائرس کی ویکسین کب مارکیٹ میں آئے گی ؟ آکسفورڈ یونیورسٹی کا بڑا دعویٰ سامنےآ گیا

کرونا وائرس کی ویکسین کب مارکیٹ میں آئے گی ؟ آکسفورڈ یونیورسٹی کا بڑا دعویٰ سامنےآ گیا

آکسفورڈ یونیورسٹی میں کورونا وائرس ویکسین ٹیم کے رہنما نے گذشتہ روز اعلان کیا کہ کم از کم آئندہ گرمیوں تک کچھ بھی معمول پر واپس آتا دکھائی نہیں دیتا۔

کرونا وائرس کی ویکسین کب مارکیٹ میں آئے گی اور لوگ کب روٹین لائف انجوائے کر سکیں گے؟ ان سوالات کا جواب دیتا ہوئے پروفیسر اینڈریو پولارڈ نے کہا کہ چہرے کے ماسک اور معاشرتی دوری کے قواعد لوگوں کو اپنائے رکھنا ہو گا. انہوں نے کہا کہ ابھی ویکسین کی تیاری میں مزید کئی مہینے لگ سکتے ہیں اور اگر ویکسین آ بھی جائے تو سب سے پہلے یہ ان افراد کو دی جائے گی جو قلیدی عہدوں پر کام کر رہے ہیں.
“گرمی تک جلدی جلدی زندگی معمول پر نہیں آئے گی۔ ہمیں جولائی تک ماسک کی ضرورت ہوسکتی ہے ، ”پولارڈ نے آکسفورڈ کے سابق طلباء کے ساتھ ایک آن لائن سیمینار کے دوران کہا۔

گر ہم کسی ایسی ویکسین کو بنانے میں کامیاب ہو جاتے ہیں جو بیماری سے بچنے کے لئے موثر ہے تو یہ وائرس پر قابو پانے کا اب تک کا بہترین طریقہ ہو گا۔ پروفیسر نے مزید کہا ، لیکن درمیانی مدت میں ہمیں ابھی بھی بہتر علاج ڈھونڈنے کی ضرورت ہوگی.

“زندگی کب معمول پر آتی ہے؟ یہاں تک کہ اگر ہمارے پاس ہر ایک کے لئے کافی ویکسین موجود ہو بھی جائے تب بھی میرے خیال میں یہ امکان نہیں ہے کہ ہم بہت تیزی سے اس مقام پرپہنچ جائیں جہاں جسمانی دوری کے قواعد کو ختم کیا جاسکتا ہو.
سیاستدانوں اور حکومتوں کے مشیر صحت نے بار بار کہا ہے کہ جب تک کوئی ویکسین دستیاب نہیں ہوتی اس وقت تک سخت اقدامات کو برقرار رکھنا پڑے گا
بندروں پر کئے جانے والے ابتدائی تجربات کے نتائج کو دیکھتے ہوئے سائنسدانوں نے آکسفورڈ کی کورونا وائرس ویکسین کی تاثیر پر شکوک و شبہات کا اظہار کیا۔

#کروناوائرس، #ویکسین، #آکسفورڈیونیورسٹی، #پروفیسراینڈریوپولارڈ،

User Rating: Be the first one !

About Daily Pakistan

Check Also

این اے 249: ضمنی الیکشن کا میدان پیپلز پارٹی نے مار لیا

این اے 249: ضمنی الیکشن کا میدان پیپلز پارٹی نے مار لیا غیر حتمی نتائج …

Skip to toolbar