Breaking News
Home / پاکستان / کراچی طیارہ حادثے کی ابتدائی رپورٹ 22جون کو پبلک کی جائے گی، غلام سرور خان

کراچی طیارہ حادثے کی ابتدائی رپورٹ 22جون کو پبلک کی جائے گی، غلام سرور خان

کراچی طیار ہ حادثے کی ابتدائی رپورٹ کے بعد ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کی جائے گی ‘غلام سرور خان
کورونا کی وجہ سے پی آئی اے کا خسارہ 4بلین سے دوبارہ بڑھ گیا ہے ،
جائے حادثہ کے تمام متاثرہ لوگوں کو بھی امداد دی جائے گی.غلام سرور خان

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن ) وفاقی وزیر برائے ہوا بازی غلام سرور خان نے کراچی طیارہ حادثے کی ابتدائی رپورٹ 22جون کو پبلک کرنے کا اعلان کر دیا . کہتے ہیں کہ ڈیٹا اور وائس باکس مل چکے، ابھی تک حادثے کی ذمہ داری کسی پر ذمہ داری نہیں ڈالی گئی،ابتدائی رپورٹ کے بعد ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کی جائے گی ،شہدا کے لواحقین کو 10،10 لاکھ روپے پہنچا دیے گئے ،انشورنس کی رقم کی منتقلی میں 4 سے6 ماہ لگ سکتے ہیں ۔
لاہور میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر برائے ہوا بازی غلام سرور خان نے کہا کہا فرانسیسی ٹیم دونوں باکس ساتھ لے کر فرانس چلی گئی ہے۔ امید ہے کہ آئندہ ایک ہفتے میں ابتدائی معلومات سامنے آجائیں گی۔ انٹرنیشنل ایئر ایکسڈنٹ اور پاک فضائیہ افسران تحقیقاتی کمیٹی میں شامل ہیں،11رکنی ٹیم میں ایئر بس ، انجن اور ان کے سی اے اے کے لوگ بھی ہیں، ابتدائی انکوائری رپورٹ 22 جون تک پبلک کردیں گے۔
وفاقی وزیر نے کہا کہ 97معصوم جانوں کا ضیاع پرکسی کی کوتاہی کو نظر انداز نہیں کیاجاسکتا لیکن قبل ازوقت کوئی ایسی بات کرکے کسی کی دل آزاری نہ کی جائے، ماہرانہ رائے اور انکوائری رپورٹ آنے تک کوئی موقف نہیں دیناچاہیے۔غلام سرور خان نے بتایا کہ حادثے کا شکار ہونے والے ایئرکرافٹ اور انجن بارے الگ الگ انکوائری کی جا رہی ہے۔ ابھی تک کسی کی غلطی یا کوتاہی کا کوئی تعین نہیں ہوا۔ انہوں نے کہا کہ طیارہ حادثہ پر سب کو بڑا افسوس ہے۔ طیارے میں عملے سمیت 99 افراد سوار تھے۔
وفاقی وزیر نے کہا کہ فی الحال طیارہ حادثے پر کسی کی غلطی یا کوتاہی کا کوئی تعین نہیں ہو سکا، حادثے کی کسی پر بھی ذمہ داری نہیں ڈالی گئی، کپتان کا 25سالہ تجربہ تھا اس سے ماضی میں کبھی غلطی نہیں ہوئی، طیارہ حادثے کی انکوائری مکمل ہونے سے پہلے کوئی رائے نہیں دی جاسکتی۔انہوںنے کہاکہ 10،10 لاکھ روپے شہید کے لواحقین تک پہنچا دئیے ہیں۔
وفاقی وزیر غلام سرور خان نے کہا کہ شہدا کے لواحقین کو 10،10 لاکھ روپے پہنچا دیے گئے ہیں۔ انشورنس کی رقم کی منتقلی میں 4 سے6 ماہ لگیں گے۔ طیارہ حادثے کی مکمل رپورٹ آنے میں 6 ماہ لگ سکتے ہیں۔
غلام سرور نے کہا کہ انہوں نے خود جائے حادثہ کی جگہ کا بھی دورہ کیا ہے۔ جائے حادثہ پر گھروں میں کام کرنے والی 3 لڑکیوں میں سے ایک جاں بحق ہوگئی۔ جاں بحق لڑکی کے ورثا کو بھی امدادی طور پر 10لاکھ روپے دیے گئے ہیں۔ طیارے حادثے میں زخمیوں کو 5،5لاکھ روپے دے رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ جائے حادثہ پر مکانات اور گاڑیاں بھی متاثر ہوئیں۔ جائے حادثہ کے تمام متاثرہ لوگوں کو بھی امداد دی جائے گی.
غلام سرور نے نیب انکوائری کے حوالے سے بات کرتے ہوئے کہا کہ نیب ایک خودمختار ادارہ ہے،جنہوں نے 35سالل میں اس ملک کو لوٹا ان کی انکوائری ہوتی ہے تو وہ شور کیوں مچاتے ہیں۔غلام سرور نے استعفے کی خبروں کی تردید کرتے ہوئے بتایا کہ ان سے استعفیٰ مانگا گیا نہ ہی ایسی پیشکش کی اور نہ کسی کا مطالبہ تھا، ان کا کہنا تھا کہ کورونا کی صورتحال کے باعث معیشت مزید دبا کا شکار ہوئی، کورونا سے پہلے پی آئی اے کا خسارہ 4بلین سے کم کرکے ایک بلین پر لائے، کوروناکی صورتحال کی وجہ سے پی آئی اے کا خسارہ دوبارہ بڑھ گیا ہے .

User Rating: Be the first one !

About Daily Pakistan

Check Also

حکومت پاکستان دسمبر 2022تک پاکستان میں فائیو جی ٹیکنالوجی متعارف کرانے کے لئے کوشاں ہے، امین الحق

اسلام آباد۔ 23نومبر (ڈیلی پاکستان آن لائن ) :وفاقی وزیر برائے آئی ٹی و ٹیلی …

Skip to toolbar